You are here: Home
 
 

وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو کا بیٹا کلب میں طوائفوں کے ساتھ رنگ رلیاں منانے میں ملوث

E-mail Print PDF

0Pala9824مقبوضہ بیت المقدس (فلسطین نیوز۔مرکز اطلاعات) اسرائیل کے کثیرالاشاعت اخبارات نے انکشاف کیا ہے کہ وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو کا ’صا حبزادہ‘ حال ہی میں ایک عریاں نائٹ کلب میں طوائفوں  کے جھرمٹ سے برآمد ہوا۔

فلسطین نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق نیتن یاھو  کا بیٹا یائیر نیتن یاھو کی ایک صوتی ریکارڈنگ سامنے آئی ہے جس میں وہ اپنے ایک دوست کے ساتھ نائیٹ کلب سے باہر نکلتے ہوئے گفتگو کررہاہے۔

رپورٹ کے مطابق یائیر نیتن یاھو نے اپنے دوست سے کہا کہ وہ اسے  طوائف کے ساتھ رنگ رلیاں منانے کے لیے 400 شیکل کی رقم دے تاہم اس کا دوست رقم دینے سے انکار کرتا ہے۔ اس پر نیتن یاھو کا بیٹا کہتا ہے کہ میرے والد نے تمہارے والد کے ساتھ 20ارب ڈالر کا معاہدہ کیا اور تم چار سو شیکل بھی نہیں دے سکتے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق یہ واقعہ کچھ عرصہ پہلے پیش آیا تھا۔ اس میں نین یاھو کا بیٹا ’یسرامکو‘ نامی ایک کاروباری کمپنی کے سربراہ کوبی میمون کے بیٹے سے بات کرتا ہے۔ یہ کمپنی ایک قدرتی گیس کے بہت بڑے ذخیرے ’تمار‘ کی مالک ہے۔ دونوں دوست اسرائیل میں اکثر نائیٹ کلبوں میں جاتے اور طوائفوں کے ساتھ دل بہلاتے پائے گئے ہیں۔