You are here: فلسطین جیل سے رہائی پانے والی لڑکی والدین پر صیہونی شرپسندوں کا قاتلانہ حملہ
 
 

جیل سے رہائی پانے والی لڑکی والدین پر صیہونی شرپسندوں کا قاتلانہ حملہ

E-mail Print PDF

0Pala9839جنین (فلسطین نیوز۔مرکز اطلاعات) اسرائیل جیل میں ڈیڑھ سال سے قید ایک 17 سالہ فلسطینی لڑکی کی گذشتہ روز جیل سے رہائی کے موقع پر صیہونی شرپسندوں نے اس کے والدین اور دیگر افراد پر حملہ کردیا جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہوگئے۔

فلسطین نیوز کو موصول ہونے والی اطلاعات کے مطابق غرب اردن کے شمالی شہر جنین کی رہائشی امل قبھا کو جیل سے رہا کیا گیا۔ اس موقع پر طولکرم شہر میں جبارہ چیک پوسٹ پر امل کو لینے کے لیے اس کے والدین اور دیگر شہریوی کی بڑی تعداد جمع تھی۔

امل کو لینے کے لیے آئے اس کے والدین  کے ساتھ جبارہ چیک پوسٹ پر صیہونی شرپسندوں نے نازیبا حرکات کیں، ان پر تشدد کیا اور انہیں جان سے مارنے کی دھمکیاں دیں۔ صیہونی غنڈہ گردوں کے گروپ نے فلسطینیوں کو دہشت گرد قرار دیا اور ان پر سنگ باری کی کوشش کی تاہم اسرائیلی فوج نے صیہونی شرپسندوں کو وہاں سے پیچھے ہٹا دیا۔

بعد ازاں رہائی پانے والی فلسطینی لڑکی امل قبھا کو اس کے آبائی شہر میں موجود اس کی رہائش گاہ پر لے جایا گیا۔